پنجاب اسمبلی میں نو منتخب اراکین اسمبلی نے حلف اٹھالیا

شیئر کریں

پنجاب اسمبلی میں نو منتخب اراکین اسمبلی نے حلف اٹھالیا ہے۔ سپیکر پنجاب اسمبلی رانا محمد اقبال کی زیرصدارت اجلاس کے دوران نو منتخب اراکین نے حلف اٹھایا۔ اسمبلی اجلاس کے اگلے مرحلے میں سپیکر اور ڈپٹی سپیکر کا انتخاب عمل میں لایا جائے گا۔

پنجاب اسمبلی کے 371 کے ایوان میں تحریک انصاف کو مجموعی طور پر 175 نشستوں کے ساتھ برتری حاصل ہے ،جبکہ مسلم لیگ (ن)  160 سیٹوں کے ساتھ دوسرے، مسلم لیگ (ق) 10 سیٹوں کے ساتھ تیسرے اور پیپلز پارٹی 7 سیٹوں کے ساتھ چوتھے نمبر پر ہے۔

پنجاب اسمبلی کی 7 نشستیں ارکان کے قومی اسمبلی کا حلف اٹھانے کے باعث خالی ہیں جب کہ تین حلقوں میں نتیجہ زیر التوا اور 3 میں الیکشن روکے گئے ہیں۔

مسلم لیگ ن کی رکن زیب النسا سابق وزیراعظم نواز شریف کی تصویر کے ہمراہ اسمبلی آئیں تو سکیورٹی سٹاف نے انہیں دروازے پر ہی روک لیا۔اس موقع پر لیگی خاتون سے اسمبلی سیکورٹی سٹاف کی تصویر لینے کی کوشش جس پر انہوں نے مزاحمت بھی کی۔ اسمبلی سٹاف کا کہنا ہے کہ ایوان میں کسی کی تصویر لے کر جانے کی اجازت نہیں، اس لیے خاتون رکن زیب النسا سے سیکیورٹی سٹاف نے تصویر لی۔

دوسری جانب پنجاب اسمبلی کے سپیکر اور ڈپٹی سپیکر کے لیے الیکشن شیڈول کا اعلان کردیا گیا ہے جس کے مطابق امیدوار آج شام 5 بجے تک کاغذات نامزدگی جمع کراسکیں گے، اسپیکر کے لیے امیدواروں کے کاغذات کی جانچ پڑتال 5 بجکر10 منٹ پرہوگی۔

اسمبلی سیکریٹریٹ کے مطابق سپیکر اور ڈپٹی سپیکرکے امیدواروں کی فہرست 6 بجے آویزاں کردی جائےگی جبکہ سپیکر اور ڈپٹی سپیکر کا انتخاب کل خفیہ رائے شماری سے کیا جائے گا۔

تحریک انصاف کی جانب سے سپیکر پنجاب اسمبلی کے لیے نامزد چوہدری پرویز الٰہی اور ڈپٹی سپیکر کے لیے دوست مزاری نے کاغذات جمع کرادیئے۔ اس کے علاوہ مسلم لیگ (ن) کے نامزد سپیکر کے لیے چوہدری اقبال اور مجتبیٰ شجاع الرحمن نے کاغذات جمع کرائے، جبکہ ڈپٹی سپیکر کے لیے (ن) لیگ کے وارث کلو اور رانا اعجاز نے کاغذات جمع کرائے۔


شیئر کریں