پاکستانی فنکاروں کو 48 گھنٹے میں بھارت چھوڑنے کا الٹی میٹم

پاکستانی فنکاروں کو 48 گھنٹے میں بھارت چھوڑنے کا الٹی میٹم

نیوز ڈیسک۔۔۔

بھارتی ریاست مہاراشٹر کی قوم پرست جماعت مہاراشٹرا نونرمن سنہا نے پاکستان کے فنکاروں کو 48 گھنٹوں میں بھارت چھوڑنے کی دھمکی دی ہے۔

انڈین ایکسپریس کی ایک رپورٹ کے مطابق قوم پرست جماعت ایم این ایس کے رکن امے کھوپکر نے اپنے ایک بیان میں کہاہم تمام پاکستانی اداکاروں اور آرٹسٹوں کو بھارت چھوڑنے کے لیے 48 گھنٹوں کا وقت دیتے ہیں۔ اگر ایسا نہیں ہوا تو ایم این ایس جماعت خود انہیں باہر نکالے گی۔

پاکستان کے کئی مقبول اداکار اور گلو کار بھارت میں مختلف پراجیکٹس پر کام کررہے ہیں جن میں فواد خان، علی ظفر، ماورا حسین، عمران عباس، ماہرہ خان، گلوکار راحت فتح علی خان اور عاطف اسلم شامل ہیں۔

اس سے قبل انتہا پسند تنظیم نے ماہرہ خان اور فواد خان کی آنے والی فلموں رئیس اور اے دل ہے مشکل کی پروموشن کی اجازت نہ دینے کی دھمکی بھی دی تھی۔

شیو سینا کے فلم ونگ چترا پتا سینا کے جنرل سیکریٹری اکشے برداپرکر کا کہنا تھا کہ ہم مہاراشٹر کی سر زمین پر کسی پاکستانی اداکار، کرکٹر یا فنکار کو نہیں آنے دیں گے۔