استاد نصرت فتح علی خان کا 68واں یوم پیدائش آج منایا جا رہا ہے

استاد نصرت فتح علی خان کا 68واں یوم پیدائش آج منایا جا رہا ہے

نیوز ڈیسک۔۔۔

موسیقی کی دنیا کے کا عظیم نام استاد نصرت فتح علی خان کا 68واں یوم پیدائش آج منایا جا رہا ہے ۔ فن قوالی کو پوری دنیا میں متعارف کرانے والے اس عظیم گلوکاری کی آواز سرحدوں کی قید سے آزاد تھی ۔

تصوف، نغمگی، سْر ، تال، قوالی اور ہمہ گیریت، یہ الفاظ جہاں بھی ایک ساتھ لیے جائیں گے تو استاد نصرت فتح علی خان کا نام ضرور لیا جائے گا ۔نصرت فتح علی خاں 13 اکتوبر 1948 کو فیصل آباد میں پیدا ہوئے۔

انہوں نے پہلی پبلک پرفارمنس 1971 میں پیش کی تب ان کی عمر صرف16سال تھی۔ شہنشاہ قوالی نے وہ مقام بنایا کہ بالی ووڈ اور ہالی ووڈ میں موسیقی کو اْن کے بغیر ادھورا سمجھا جانے لگا۔ خان صاحب نے پنجابی اردو اور فارسی میں بے شمار کلام گائے۔

ٹائم میگزین نے 2006 میں ایشین ہیروز کی فہرست میں ان کا نام بھی شامل کیا، بطور قوال اپنے کریئر کے آغاز میں اس فنکار کو کئی بین الاقوامی اعزازات سے بھی نوازا گیا۔پاکستان کی حکومت نے نصرت فتح علی خان کی خدمات کا اعتراف کرتے ہوئے انہیں تمغہ برائے حسن کارکردگی سے نوازا۔

استاد نصرت فتح علی خاں 16 اگست 1997 کو لندن میں انتقال کر گئے۔ ان کی سالگرہ کے موقع پر دنیا بھر میں ان کے مداحوں کی جانب سے انہیں خراج تحسین پیش کرنے کے لیے تقریبات کا انعقاد کیا جا رہا ہے۔