اسلام آباد کے کوڑے میں پلاسٹک کھانے والا فنگس دریافت

اسلام آباد کے کوڑے میں پلاسٹک کھانے والا فنگس دریافت

سائنس ڈیسک…

اسلام آباد کے ایک کوڑے دان میں ماہرین کو ایک ایسا فنگس ملا ہے جو پلاسٹک کو چند ہفتوں میں گھلا کر ختم کر سکتا ہے۔

ورلڈ اکنامک فورم کی ایک رپورٹ کے مطابق ایسپرجیلس ٹیوبنجینسس فنگس چند ہفتوں میں پلاسٹک کا کچرا ختم کر سکتا ہے اور یہ فنگس اسلام آباد کے ایک کوڑے دان میں پایا گیا ہے۔  تاہم چینی ماہرین نے اس پر مزید تحقیق کر کے بتایا ہے کہ اطراف کا درجہ حرارت اور پی ایچ کا توازن اس فنگس کی صلاحیت پر اثرانداز ہوتا ہے۔ چینی ماہرین فنگس کی بہترین کارکردگی کے لیے موزوں حالات جاننے کی کوشش کر رہے ہیں۔

چینی ماہرین کے مطابق  ایسپرجیلس ٹیوبنجینسس تجربہ گاہ میں مؤثر ثابت ہوئی ہے اور اس کی تحقیقات سائنسی جریدے اینوائرمینٹل پلوشن میں بھی شائع ہوئی ہیں۔ ماہرین نے نوٹ کیا کہ فنگس کا مرکزی حصہ مائسیلیئم پولی ایسٹر پولی یوریتھین پلاسٹک پر اپنی کالونی بناتا ہے اور پلاسٹک کی سطح پر خراشیں ڈال کر اسے ٹوٹ پھوٹ کا شکار بناتا ہے۔

اس سے قبل بھی بعض بیکٹیریا میں پلاسٹک تلف کرنے والے خواص دیکھے گئے ہیں۔ اسی برس ماہرین نے مومی سنڈی (ویکس ورم) کے بارے میں انکشاف کیا تھا کہ وہ قدرتی طور پر پلاسٹک تلف کرتی ہے کیونکہ اس کی خوراک شہد کے چھتوں کا موم ہے اور وہ پلاسٹک کو بھی موم سمجھ کر کھا جاتی ہے۔

 ایسپرجیلس ٹیوبنجینسس کی دریافت ماحولیاتی آلودگی سے نمٹنے کی طرف ایک بڑا قدم ثابت ہو سکتی ہے، جس کی مدد سے پلاسٹک، جو کہ سمندروں ، دریاوں اور خشکی پر آلودگی کا سب سے بڑا سبب ہے، کو قدرتی طریقے سے ٹھکانے لگایا جا سکے گا۔