نیب نے آصف زرداری کی بریت کو چیلنج کر دیا

نیب نے آصف زرداری کی بریت کو چیلنج کر دیا

نیوز ڈیسک…

قومی احتساب بیورو (نیب) نے غیر قانونی اثاثہ جات ریفرنس میں پیپلز پارٹی کے شریک چیئرمین‏ آصف علی زرداری کی بریت کے فیصلے کو لاہورہائیکورٹ کے راولپنڈی بینچ میں چیلنج کردیا ہے۔

 26 اگست کو راولپنڈی کی احتساب عدالت کے جج خالد محمود رانجھا نے آصف علی زرداری کو غیر قانونی اثاثہ جات کے ریفرنس کیس سے بری کردیا تھا۔

ترجمان نیب کے مطابق لاہور ہائیکورٹ راولپنڈی بینچ میں دائر کی گئی اپیل میں سابق صدر آصف علی زرداری کی بریت کےفیصلے کو چیلنج کرتے ہوئے موقف اختیار کیا گیا ہے کہ راولپنڈی کی احتساب عدالت نے مقدمے کے اہم گواہوں کو نظرانداز کیا جبکہ عدالت نے اہم ریکارڈ بھی پیش نہیں کرنے دیا اور جلد بازی میں فیصلہ سنا دیا گیا۔ اپیل میں موقف اختیار کیا گیا کہ احتساب عدالت نے سابق صدر کو سرسری سماعت کے نتیجے میں بری کرکےغلط مثال قائم کی۔

اپیل کے مطابق ‏نیب کے پاس آصف علی زرداری کے خلاف آف شور کمپنیوں، سرے محل اور بینک اکاؤنٹس سے متعلق 22 ہزار تصدیق شدہ دستاویزات موجود ہیں اور ‏عدالت ریکارڈ طلب کرکے مزید کارروائی کرسکتی تھی۔

نیب حکام نے اپیل میں عدالت عالیہ سے استدعا کی کہ سابق صدر آصف علی زرداری کے خلاف کیس کا فیصلہ میرٹ پر کیا جائے۔