افغان صدر نے پاکستانی سفارتی اہلکار کے قتل کی تحقیقات کا حکم دے دیا

افغان صدر نے پاکستانی سفارتی اہلکار کے قتل کی تحقیقات کا حکم دے دیا

نیوز ڈیسک…

افغانستان کے صدر اشرف غنی نے جلال آباد میں پاکستانی سفارت کار پر قاتلانہ حملے کی تحقیقات کا حکم دے دیا ہے۔

افغان صدرکی جانب سے جاری کئے گئے بیان کے مطابق سیکیورٹی حکام کو حکم دیا گیا ہے کہ وہ اس واقعہ کی تفتیش کریں اور ملوث عناصر کو کیفر کردار تک پہنچائیں۔

اپنے بیان میں افغان صدر نے جلال آباد میں پاکستانی سفارت خانے کے اہلکار کے قتل کی مذمت کی اور اسے سفارتی اصولوں کے خلاف دہشت گردی کی کارروائی قرار دیا۔

واضح رہے کہ پاکستانی سفارت خانے کے ویزا سیکشن میں کام کرنے والے نئیر اقبال رانا کو جلال آباد میں ان کی رہائش گاہ کے قریب بازار میں خریداری کرتے ہوئے گولیاں مار کر قتل کر دیا گیا تھا۔

رواں برس جون میں پاکستانی سفارت خانے کے دو اہلکاروں کو بھی پاکستان آتے ہوئے اغوا کرلیا گیا تھا، جنہیں بعد میں افغان سیکیورٹی فورسز نے بازیاب کرایا تھا۔

دفتر خارجہ نے پاکستانی سفارت کار کے قتل کی مذمت کی اور افغان ناظم الامور کو دفتر خارجہ طلب کرکے شدید احتجاج کیا اور مطالبہ کیا کہ پاکستانی سفارت کاروں کو افغانستان میں فول پروف سیکیورٹی فراہم کی جائے۔