عالمی مخالفت کے باوجود امریکہ یروشلم کو اسرائیلی دارالحکومت تسلیم کرے گا

عالمی مخالفت کے باوجود امریکہ یروشلم کو اسرائیلی دارالحکومت تسلیم کرے گا

انٹر نیشنل ڈیسک…

اعلیٰ امریکی حکام کا کہنا ہے کہ صدر ٹرمپ آج  یروشلم کو اسرائیل کا دارالحکومت تسلیم کر لیں گے۔

وہ وزارتِ خارجہ کو حکم دیں گے کہ  امریکی سفارت خانے کو تل ابیب سے یروشلم منتقل کرنے کا عمل شروع کر دیں۔ یہ فیصلہ یروشلم کے بارے میں برسوں پر محیط امریکی پالیسی اور بین الاقوامی اتفاقِ رائے کے منافی ہے۔

ترکی، اور کئی عرب ملکوں نے خبردار کیا ہے کہ اس فیصلے کے نتیجے میں مسلم دنیا میں تشدد بھڑک سکتا ہے۔ امریکی حکام کا کہنا ہےکہ سفارت خانے کی یروشلم منتقلی میں کئی سال لگ سکتے ہیں۔

اس لیے صدر ٹرمپ ایک حکم نامے پر بھی دستخط کریں گے جس میں سفارت خانے کی منتقلی میں عارضی تاخیر کی منظوری دی جائے گی۔